خواتین پھولوں کے ساتھ ‘بیس بیگ’ رکھ سکتی ہیں۔

یہ ‘فیس پیک’ جلد کو ہموار، کومل اور ‘چمکدار’ رکھنے کے لیے دودھ، پھلوں اور پھولوں کے ساتھ استعمال کیا جاتا ہے۔

جو خواتین پھولوں جیسی نازک چہرے کی خوبصورتی چاہتی ہیں وہ پھولوں والا ’فیس پیک‘ لگا سکتی ہیں۔ پھولوں میں مختلف دواؤں کی خصوصیات ہیں۔ جو بغیر کسی نقصان کے قدرتی خوبصورتی دے سکتا ہے۔

یہ ‘فیس پیک’ جلد کو ہموار، کومل اور ‘چمکدار’ رکھنے کے لیے دودھ، پھلوں اور پھولوں کے ساتھ استعمال کیا جاتا ہے۔ اسے بغیر کسی ہچکچاہٹ کے بھی استعمال کیا جاسکتا ہے کیونکہ یہ چہرے کے دانے اور بلیک ہیڈز کو دور کرتا ہے۔

آئیے دیکھتے ہیں کہ چہرے کو خوبصورت بنانے کے لیے کس قسم کے پھول استعمال کیے جا سکتے ہیں۔

آورم فلاور بیس بیگ

مطلوبہ چیزیں

چاول کا آٹا – 1 چمچ
ہلدی پاؤڈر – 2 چمچ
گلاب پانی – مطلوبہ رقم

آورم کا پھول دھوپ میں جانے کی وجہ سے سیاہ پڑی ہوئی جلد کو بحال کرنے میں مدد کرتا ہے۔ اوپر دی گئی تمام چیزوں کو آپس میں ملا کر گوند کی طرح پیس لیں۔ اسے چہرے اور گردن پر لگائیں اور جلد کی رنگت میں تبدیلی محسوس کرنے کے لیے 15 منٹ تک ہلکے سے مساج کریں۔ آپ ہفتے میں ایک بار ایسا کر سکتے ہیں۔

گلاب کے پھولوں کا بیس پیک

مطلوبہ
گلاب کا پھول – 1
دودھ – 1 چمچ
گندم کی چوکر – 1 چمچ

سب سے پہلے گلاب کی پنکھڑیوں کو اچھی طرح پیس لیں۔ پھر اس میں گندم کی چوکر اور دودھ ملا کر اچھی طرح پیس لیں۔ اس مکسچر کو چہرے پر لگائیں اور مساج کریں۔ پھر 15 منٹ کے بعد نیم گرم پانی سے دھو لیں چہرہ چمک اٹھے گا۔

لیمن گراس فلاور بیس پیک

مطلوبہ
سرخ پوست کا پھول – 1
دہی – 1 چمچ
ملتانی میٹ – 2 چمچ
گلاب کا پھول – 1

سب سے پہلے گلاب اور سرخ پوست کی پتیاں ڈال کر پیس لیں۔ پھر اس میں دہی اور ملتانی میتھی ملا کر چہرے پر لگائیں۔ 20 منٹ بعد چہرے کو ہموار کرنے کے لیے ٹھنڈے پانی سے دھولیں۔ بلیک ہیڈز اور گندگی دور ہو جائے گی اور ‘چمکدار’ ہو جائیں گے۔

جیسمین بیس پیک

مطلوبہ
چمیلی کی پنکھڑی – چوتھائی کپ
گاڑھا دہی – ایک چوتھائی کپ

دونوں کو بغیر پانی ڈالے مکسچر میں اچھی طرح پیس لیں۔ اسے چہرے اور گردن کے حصے پر لگائیں۔ 20 منٹ بعد پانی سے دھولیں۔ یہ فیس پیک خشک جلد والوں کے لیے بہت اچھا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.