میاں بیوی ہمبستری کرتے وقت لائٹ بند کرنا ضروری ہے یا نہیں

بہت سارے شادی شدہ افراد یہ سوال کرتے نظر آتے ہیں اور شریعت میں بہت ساری ایسی چیزیں ہیں جن کے سوالات کرنا بنتے ہیں  تاکہ ہم اپنی زندگی کو اپنی شادی کو اپنی شریعت اسلام کے مطابق گزار سکے

ایک بھائی کا یہ سوال تھا کیا مجھے بیوی سے ہمبستری کرتے وقت اپنے کمرے کی لائٹ کو بند کرنا چاہیے یا آن رکھنا چاہیے کیا ہمبستری کرتے وقت میری بیوی میرے جسم کے اعضاء کو دیکھ سکتی ہے ۔

آئیے آپ کو بتاتے ہیں اسلام میں شریعت کیا کہتی ہے اس بارےمیں

آپ کے سوال کا جواب یہ ہے اگر آپ میاں بیوی ایک دوسرے سے ازدواجی تعلق قائم کر رہے ہیں ضروری نہیں ہے کہ آپ لائٹ کو بند کریں لیکن یہ چیز ادب کے خلاف ہے آپ پوری کوشش کریں کہ میاں بیوی ایک دوسرے کے جسم کے اعضاء کو نہ دیکھیں

سنت کے مطابق یہ اجازت ہے کہ بیوی آپ کا ستر اور بیوی کا ستر دیکھ سکتے ہیں مگر آپ اگر بیوی کی شرمگاہ یا بیوی آپ کی شرمگاہ کو دیکھتی ہے اس سے کچھ بیماریاں آپ کو لگتی ہیں

شرمگاہ کو دیکھنے سے آپ کا حافظہ کمزور ہو جاتا ہے آپ کو بھولنے کی بیماری لگ سکتی ہے ۔

جب آپ ازدو اجی تعلقات قائم کرنے لگیں تو میاں بیوی کو چاہیے کہ وہ اپنے اوپر کوئی بریک چادر لے لیں تاکہ کوئی بے حرمتی نہ ہو۔

ِ

Leave a Reply

Your email address will not be published.