امریکی انخلاء مکمل طالبان کا افغانستان پر مکمل قبضہ ۔ مفت معلومات

امریکی انخلاء مکمل

امریکی انخلاء مکمل

طالبان کا افغانستان پر مکمل قبضہ

طالبان کے افغانستان پر قبضے کے بعد امریکہ نے 31 اگست تک انخلاء کی جو ڈیڈ لائن دی تھی اس سے پہلے ہی 30 اگست رات 12 بجے تک کابل ائیرپورٹ سے آخری امریکی پرواز بھی روانہ ہو گئی یوں امریکی فوج 20 سال بعد افغانستان سے نکل گئی ۔افغانستان میں جشن کا ساماں ہے
طالبان نے ہوائی فائرنگ بھی کی اور اسے تاریخی فتح قرار دیا ۔ترجمان طالبان سہیل شاہین کے مطابق
افغانستان نے مکمل آزادی حاصل کر

لی ہے اور عوام کو دل کی گہرائیوں سے مبارکباد ہو۔
طالبان رہنما انس حقانی کا کہنا ہے کہ
ہم نے افغانستان میں ایک تاریخ رقم کر دی ہے ۔امریکہ اور نیٹو کا افغانستان پر قبضہ ختم ہو گیا ہے خوشی ہے کہ یہ تاریخی لمحات دیکھنے کا فخر حاصل ہوا ۔
امریکی سینٹرل کمانڈجنرل میکنزی اور پینٹاگون نے بھی امریکی فوج کے انخلاءکی تصدیق کر دی ہے ۔امریکی صدر بائیڈن نے انخلا کے بعد اپنے پہلے بیان میں کہا ہے کہ ہم افغانستان کو چھوڑنے کے خواہش مندوں کے لیے محفوظ راستہ یقینی بنائیں گے ۔اور کہا کہ بین الاقوامی برادری طالبان سے

سفری آزادی کی توقع رکھتی ہے اور یہ بھی کہ اقوام متحدہ کی قرارداد پر عمل یقینی بنایا جائے۔
امریکی وزیر خارجہ نے بھی اپنی گفتگو میں یہ کہا کہ افغانستان میں فوجی آپریشن مکمل ہو گیا ہے سفارتی آپریشن شروع ہے امریکی سفارت کار افغانستان سے جا چکے ہیں افغانستان میں رہ جانے والے غیر ملکی اور سو سے زائد فوجیوں کا تحفظ یقینی بنایا جائے۔دوحہ میں طالبان سے رابطہ کریں گے ۔
دوسری طرف اقوام متحدہ میں سلامتی کونسل کے اجلاس ہوا جس میں طالبان سے وعدوں کی پاسداری

کرنے کی قرارداد منظور ہوئی جس کے حق میں 13 ووٹ پڑے ۔جبکہ چین اور روس نے اجلاس میں شرکت ہی نہیں کی ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.